Mon 20 November 2017

مالدیپ نے میانمارسے تجارتی تعلقات ختم کردیے

مالدیپ نے روہنگیا مسلمانوں پرجاری مظالم کے تناظر میں میانمارکے ساتھ تجارتی تعلقات ختم کردیے۔ مالدیپ کی وزارت خارجہ کی جانب سے جاری بیان کے مطابق میانمار سے تجارتی تعلقات روہنگیا مسلمانوں پر جاری مظالم کے تناظر میں ختم کیے جب کہ مالدیپ نے اقوام متحدہ سے میانمار کی صورتحال کا نوٹس لینے کا بھی مطالبہ کیا ہے۔

مالدیپ کے وزیرخارجہ کا کہنا ہے کہ میانمارمیں مسلمانوں کا قتل عام روکا جائے۔

دوسری جانب دنیا بھر کے 3 لاکھ سے زائد افراد نے میانمار میں روہنگیا مسلمانوں کی نسل کشی پر خاموش آنگ سان سوچی سے نوبل انعام واپس لینے کا مطالبہ کردیا، روہنگیا مسلمانوں سے اظہار یکجہتی کے لیے اب تک اس پٹیشن پر دنیا بھر سے 3 لاکھ سے زائد افراد دستخط کرچکے ہیں۔

واضح رہے کہ میانمار میں روہنگیا مسلمانوں پر ریاستی ظلم ڈھائے جارہے ہیں اور اب تک ہزاروں افراد کو قتل کیا جاچکا ہے۔

Leave a comment

Make sure you enter all the required information, indicated by an asterisk (*). HTML code is not allowed.