عمران خان کے لیے چھ دن کا وقت شرمندگی کے سوا کچھ نہیں ہے: مریم نواز

مسلم لیگ(ن) کی نائب صدر مریم نواز فائل فوٹو مسلم لیگ(ن) کی نائب صدر مریم نواز

مسلم لیگ(ن) کی نائب صدر مریم نواز نے کہا ہے کہ ہم نے آئی ایم ایف سے بات کی تو انہوں ںے ہمیں عمران حکومت سے کیا گیا معاہدہ تھمادیا، پٹرول اور ڈیزل کی قیمتیں نہیں بڑھائیں گے تو ملک دیوالیہ ہوجائے گا۔

لاہور گرین ٹاؤن میں شہید کانسٹیبل کی بیوہ سے ملاقات کے بعد میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ شہید کانسٹیبل کی بیوہ اور پانچ بچوں سے مل کر آئی ہوں، خود ماں ہوں، کیفیت سمجھ سکتی ہوں، چھوٹا بچہ نو ماہ کا ہے، کانسٹیبل کی شہادت کا ذمہ دار عمران خان ہے، کانسٹیبل کی بیوہ اور بچوں کو گھر ہماری حکومت دے گی، شہید کانسٹیبل کے بچوں کے تعلیمی اخراجات بھی حکومت برداشت کرے گی۔

انہوں نے کہا کہ مجھے اطمینان ہے کہ پوری قوم نے انتشار مارچ کو مسترد کر دیا، حقیقی آزادی کا سفر گھر سے شروع ہوتا ہے جب کہ عمران خان نے اپنے بچوں کو لندن میں رکھا ہوا ہے، لوگوں کو اگر آزادی دلانی ہے تو اپنے بچوں کو یہاں بلاؤ۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان کے لیے چھ دن کا وقت شرمندگی کے سوا کچھ نہیں ہے، 25 لاکھ لوگ لانے کا دعوی کرنے والاعمران خان 20 ہزار لوگوں کو بھی جمع نہیں کر سکا، لوگوں نے آزادی مارچ کو بربادی مارچ بنا کر واپس پشاور پھینک دیا، پاکستان بالخصوص پنجاب کے عوام نے پی ٹی آئی کو مسترد کر دیا، ، ان کا انتشار اور فتنہ ایکسپوز ہوگیا، عمران خان بنی گالا واپس جاؤ اور قوم کو تقسیم کرنے کے بجائے باقی زندگی اللہ اللہ کرو۔

مریم نواز نے کہا کہ رات تک ہر چیز قابو میں تھی، ان کا اصل ایجنڈا فساد اور انتشار ہے، اسلام آباد کو نذر آتش کیا گیا، کئی گھنٹے اسلام آباد جلتا رہا، ان کا رہنما جلاؤ گھیراؤ کی ترغیب دیتا رہا، یہ لوگ کہتے تھے کہ مارچ خونی ہوگا، حکومت کو عمران خان کے خلاف مقدمہ درج کرانا چاہیے، سپریم کورٹ کے فیصلے سے انہیں شہ ملی سپریم کورٹ سے کہنا چاہتی ہوں کہ وہ اپنے فیصلے پر نظر ثانی کرے۔

مریم نواز نے کہا کہ رات تک ہر چیز قابو میں تھی لیکن سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد انہیں آزادی ملی اور فتنہ فساد کا کھیل سامنے آگیا،سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد دارالخلافہ کو نذر آتش کیا گیا، کئی گھنٹے تک اسلام آباد جلتا رہا، ان کا رہنما سارا دن ٹوئٹس کرتا رہا سپریم کورٹ کے فیصلے پر کیا انہیں معلوم نہیں تھا کہ ڈی چوک تک نہیں آسکتے تو انتشار کیوں برپا کیا؟

انہوں نے کہا کہ سپریم کورٹ کو یاد دہانی کروانا چاہتی ہو شیخ رشید سے لےکر تمام وزراء کے بیانات موجود ہیں کہ خونی لانگ مارچ ہوگا، لیڈر لیس انقلاب نہیں تھا لیڈر موجود تھے سامنے گھیراؤ جلاؤ کرواتا رہا۔

انہوں نے کہا کہ حکومت کو عمران خان کے خلاف مقدمہ درج کروانا چاہیے، ہلاکتوں، زخمیوں اور املاک کو نقصان پہنچانے والوں کو کیفر کردار تک پہنچانا چاہیے۔

انہوں نے کہا کہ ہم نے آئی ایم ایف سے بات کی تو انہوں ںے ہمیں عمران حکومت سے کیا گیا معاہدہ تھمادیا، پٹرول اور ڈیزل کی قیمتیں نہیں بڑھائیں گے تو ملک دیوالیہ ہوجائے گا۔

subscribe YT Channel install suchtv android app on google app store