Thu 19 October 2017

لندن میں تین عورتوں پر دہشت گردی کا مقدمہ دائر

لندن پولیس فائل فوٹو لندن پولیس

لندن پولیس نے دہشت گردی اور قتل کی منصبوبہ سازی کے الزام میں تین خواتین پر فرد جرم عائد کردی ہے تینوں خواتین کو آج عدالت میں پیش کیا جاسکتا ہے۔

لندن پولیس نے کہا ہے کہ تین عورتوں پر دہشت گردی کا منصوبہ تیار کرنے کی فردِ جرم عائد کر دی گئی ہے۔ ان میں سے ایک کو پولیس کے چھاپے کے دوران گولی مار کر زخمی کر دیا گیا تھا۔

21 سالہ رزلین بولر کا تعلق وسطی لندن سے ہے۔ 43 سالہ مینا ڈِچ ساؤتھ ویسٹ لندن سے ہیں، جب کہ 20 سالہ خولہ برغوثی نارتھ ویسٹ لندن کے علاقوں سے ہیں۔ ان پر قتل کی سازش کا الزام بھی عائد کیا گیا ہے۔

انھیں انسدادِ دہشت گردی کی ایک کارروائی کے دوران گرفتار کیا گیا تھا جس کے دوران بولر کو پولیس نے گولی مار کر زخمی کر دیا تھا۔اب یہ خواتین ویسٹ منسٹر کی عدالت میں جج کے سامنے پیش ہوں گی۔

ڈِچ بولر کی والدہ ہیں۔ انھیں کینٹ سے گرفتار کیا گیا تھا جب کہ برغوثی کو 27 اپریل کو نارتھ ویسٹ لندن سے پکڑا گیا تھا۔بولر کو تین دن بعد ہسپتال سے فارغ ہونے کے بعد گرفتار کیا گیا تھا۔

Leave a comment

Make sure you enter all the required information, indicated by an asterisk (*). HTML code is not allowed.