روسی اسکول میں حملہ کرنے والے کی شناخت نہیں ہوسکی، ہم تحقیقات کررہے ہیں: تفتیش کار

روسی شہرایزیوسک میں اسکول میں فائرنگ فائل فوٹو روسی شہرایزیوسک میں اسکول میں فائرنگ

روس کے شہرایزیوسک میں ایک اسکول میں مسلح شخص کی فائرنگ سے 7 بچوں سمیت 13افراد ہلاک ہوگئے۔ تفتیش کاروں نے بتایا کہ ’حملہ آور کی شناخت نہیں ہوسکی، ہم تحقیقات کررہے ہیں۔

غیر ملکی خبر رساں ایجنسی ’اے ایف پی‘ کی رپورٹ کے مطابق روس میں اسکولوں پر حملوں کی کڑی کا یہ نیا واقعہ ہے جبکہ ماضی میں اس طرح کے واقعات نے روس کو ہلا کر رکھ دیا تھا جبکہ اس لاکھوں لوگوں کو یوکرین میں جنگ کا حصہ بننے کے لیے متحرک کیا جا رہا ہے۔

روس کی تحقیقاتی کمیٹی نے اپنے بیان میں کہا کہ اس حملے میں 13 افراد ہلاک ہوئے ہیں، جن میں 6 نوجوان اور7 بچے شامل ہیں جبکہ 14 بچے اور 7 نوجوان زخمی ہوئے ہیں۔

قبل ازیں، غیرملکی خبر رساں ادارے رائٹرز نے رپورٹ کیا تھا کہ روس کی تحقیقاتی کمیٹی نے ٹیلی گرام کو بیان دیتے ہوئے کہا کہ ’فائرنگ سے 9 افراد ہلاک ہوئے جن میں 2 سیکیورٹی گارڈ، 2 اساتذہ اور5 بچے شامل ہیں۔

 انہوں نے مزید بتایا تھا کہ حملہ آور نے فائرنگ کے بعد خودکشی کرلی ہے۔

تفتیش کاروں کے مطابق حملہ آور نے سیاہ رنگ کی شرٹ پہنی ہوئی تھی، جس میں نازی نشان تھے اور سیاہ ماسک سے چہرہ چھپایا ہوا تھا، انہوں نے مزید کہا کہ حملہ آور کے پاس کوئی شناختی کارڈ موجود نہیں تھا۔

تفتیش کاروں نے بتایا کہ ’حملہ آور کی شناخت نہیں ہوسکی، ہم تحقیقات کررہے ہیں‘۔

روس کی وزارت داخلہ نے کہا کہ حملے میں 20 افراد زخمی ہوئے ہیں۔

یہ خبر بھی پڑھیں: روس کے اسکول میں دہشت گردی کا واقعہ ،13افراد ہلاک،21 زخمی

علاقے کے گورنرالیگزینڈربریچالوف نے ایزیوسک میں اسکول نمبر 88 کے باہربات کرتے ہوئے تصدیق کی کہ ’ہلاک اور زخمیوں میں بچے بھی شامل ہیں‘۔

ویڈیو میں ریسکیو اور طبی کارکنوں کو پس منظر میں جائے وقوع پرکام کرتے دیکھا جا سکتا ہے، چند لوگ اسٹریچر کے ساتھ اسکول کے اندر بھاگ رہے ہیں۔

روس کی وزارت صحت کا کہنا تھا کہ زخمیوں کو طبی امداد کے لیے 14 ایمبولینس ٹیمیں کام کر رہی ہیں۔

ایزیوسک روس کے اُدمورٹ جمہوریہ کا علاقائی دارالحکومت ہے، جو ماسکو کے مشرق میں تقریباً ایک ہزار کلومیٹر (620 میل) پر واقع ہے، اس شہر کی آبادی تقریباً 6 لاکھ 30 ہزار نفوس پر مشتمل ہے۔

یاد رہے کہ اس سے قبل روس میں اسکول پر حملے کا واقعہ رواں برس اپریل میں پیش آیا تھا جب ایک مسلح شخص نے مرکزی الیانوک کے کنڈرگارٹن میں فائرنگ کرکے ایک استاد اور 2 بچوں کو نشانہ بنایا تھا۔

حکام نے کہا تھا کہ حملہ آور ذہنی مریض تھا، جس نے بعد میں گولی مار کر خود کو ہلاک کیا تھا۔

subscribe YT Channel install suchtv android app on google app store