نیمار پر لگی الزامات کی بوچھار، کیریر داؤ پر

برازیلین فٹبالر کا نیمار فائل فوٹو برازیلین فٹبالر کا نیمار

برازیلین فٹبالر پر خاتون کے ساتھ زیادتی کا الزام تھا ، اس ضمن میں آج کیس کی سماعت ہوئی جس میں جج ساؤ پاؤلو نے فٹبالر کو عدم شواہد کی بنیاد پر بری کرتے ہوئے مقدمہ ختم کردیا۔

نیمار پر 27 سالہ خاتون پیرز سائنٹ نے الزام لگایا گیا، جسے فٹبالر نے یکسر مسترد کردیا تھا۔ متاثرہ خاتون کا دعویٰ تھا کہ اُن کے پاس ویڈیوز وغیرہ بھی موجود ہیں البتہ درخواست گزار اُن شواہد کو عدالت میں پیش نہ کرسکیں۔

رپورٹ کے مطابق نیمار کے وکیل نے عدالت سے استدعا کی کہ اگر درخواست گزار کے پاس شواہد نہیں تو کیس بند کیا جائے، جج انا پاؤلا نے فریق کی جانب سے شواہد فراہم نہ کرنے پر مقدمے کو بند کیا اور فٹبالر کو باعزت بری قرار دے دیا۔

عدالتی فیصلے پر فٹبالر نے شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ ’’میں مخلص رہوں گا البتہ یہ نہیں کہہ سکتا کہ میں خوش ہوں کیونکہ جھوٹے مقدمے کی وجہ سے مجھے بہت زیادہ تکلیف پہنچی، شکر ہے کہ اب ریلیف ملا۔

نیمار کا کہنا تھا کہ یہ کیس میرے لیے کسی تکلیف دہ حادثے سے کم نہیں تھا کیونکہ اس کی وجہ سے میری فیملی کی ساکھ کو بھی نقصان پہنچا اور جو لوگ مجھے جانتے تھے انہوں نے بھی عجیب سوالات کیے۔

subscribe YT Channel install suchtv android app on google app store