بلدیہ عظمیٰ کراچی کا شہریوں کیلئے بڑا قدم

بلدیہ عظمیٰ کراچی کا شہریوں کیلئے بڑا قدم فائل فوٹو

بلدیہ عظمیٰ کراچی نے کڈنی ہل احمد علی پارک کی تعمیر کا فیصلہ کیا ہے۔

بلدیہ عظمیٰ کراچی نے کے ڈی اے اسکیم نمبر32 کڈنی ہل (احمد علی پارک) کی تعمیر کا فیصلہ کیا ہے۔ کڈنی ہل پر واقع احمد علی پارک 62 ایکڑ رقبے پر مشتمل ہے لہٰذا سپریم کورٹ آف پاکستان کی ہدایت کی روشنی میں اس خوبصورت پہاڑی پر مجوزہ پارک کی اراضی پر قائم تجاوزات کو فوری طور پر ہٹانے اور اس کا پی سی ون تیار کرکے عیدالفطر کے بعد اس پارک کا سنگ بنیاد رکھا جائے گا۔

کراچی کی بڑی سڑکوں کے کناروں اور فٹ پاتھوں پر تمام تجارتی و فلاحی سرگرمیوں کو ختم کرنے کے لیے تجاوزات کے خلاف ایک اور بڑی کارروائی اور تسلسل کے ساتھ مہم شروع کی جارہی ہے، اس بات کا فیصلہ میئرکراچی وسیم اختر کی صدارت میں ہونے والے اعلیٰ سطح کے اجلاس میں کیا گیا۔

سپریم کورٹ کی ہدایت پر انسداد تجاوزات کارروائی کے جائزہ اجلاس میں ڈپٹی میئر سید ارشد حسن، میٹروپولیٹن کمشنر ڈاکٹر سید سیف الرحمنٰ، سینئر ڈائریکٹر کوآرڈی نیشن مسعود عالم، سینئر ڈائریکٹر انسداد تجاوزات بشیر صدیقی، ڈائریکٹر لینڈ شیخ کمال، ایڈیشنل ڈائریکٹر اسٹیٹ، مشیر قانون عذرا مقیم شریک تھیں، اجلاس میں بتایا گیا کہ کڈنی ہل پارک پر 5 بنگلے غیرقانونی تعمیر کیے گئے ہیں اور کچھ اور تجاوزات بھی ہیں۔

میئر کراچی وسیم اختر نے ہدایت کی کہ سپریم کورٹ کے واضح احکام ہیں کہ پارکوں کی جگہ کو مکمل بحال کیا جائے، کڈنی ہل پارک سے بھی تجاوزات کا مکمل خاتمہ کرکے اسے شہریوں کے لیے ایک بہترین پارک بنایا جائے گا۔

کڈنی ہل پارک کی حدود میں جو رہائشی مکانات آرہے ہیں پہلے انھیں باقاعدہ مارکنگ کرنے کے بعد نوٹس جاری کردیا جائے اور انھیں اپنے مکانات کو حدود میں کرنے کی ہدایت کی جائے تاہم اس کے باوجودبھی اگر کوئی ازخود بڑھائی گئی جگہ خالی نہیں کرتا تو محکمہ انسداد تجاوزات کڈنی ہل پارک کی حدود میں آنے والی رہائشی تعمیرات کا خاتمہ کردے۔

اجلاس میں بتایا گیا کہ شہر کے مختلف مقامات پر تجاوزات کے خلاف کارروائی بلاامتیاز جاری ہے اور اب بالخصوص راشد منہاس روڈ، گلشن اقبال، حسن اسکوائر، گلستان جوہر ملینیئم، نارتھ ناظم آباد اور دیگر علاقوں کی فٹ پاتھوں پر رات کے وقت باقاعدہ ریسٹورنٹ سجالینے والے اور فٹ پاتھوں پر کھانے کی میزیں، کرسیاں اور تخت رکھ دینے والوں کو تنبیہ کردی گئی ہے کہ وہ فوری طور پر وہاں سے ان چیزوں کو ہٹالیں بصورت دیگر ان کا سامان ضبط کرلیا جائے گا، بلدیہ عظمیٰ کراچی ہر صورت عدالتی احکام پر عملدرآمد کرے گی۔

اس موقع پر میٹروپولیٹن کمشنر ڈاکٹر سید سیف الرحمن نے بتایا کہ فٹ پاتھوں پر قائم مختلف رفاہی اداروں کو پہلے بھی نوٹس جاری کیے جس پر عمل کرتے ہوئے بعض اداروں نے فٹ پاتھوں سے اپنا سامان اور شیڈ ہٹادیے تھے مگر اس کے باوجود شہر کی مختلف شاہراہوں پر فلاحی اداروں کا سامان اور شیڈ موجود ہیں لہٰذا اب محکمہ انسداد تجاوزات کو ہدایت کردی گئی ہے کہ وہ ان کے خلاف فوری کارروائی کرے اور فٹ پاتھوں کو ہر قسم کی تجاوزات سے پاک کرکے پیدل چلنے والوں کے لیے بحال کرے۔

subscribe YT Channel install suchtv android app on google app store