عمران خان کس کی سرپرستی کر رہے ہیں؟ سینیٹر حافظ حسین احمد نے تہلکہ خیز انکشافات کر دیئے

سابق سینیٹر حافظ حسین احمد فائل فوٹو سابق سینیٹر حافظ حسین احمد

جمعیت علمائے اسلام کے مرکزی ترجمان و سابق سینیٹر حافظ حسین احمد نے کہا ہے کہ حکمران مافیا کی سرپرستی کررہے ہیں اور اپوزیشن اپنے کئے کی معافیاں مانگ رہی ہے۔

عمران خان اور اپوزیشن کے بعض رہنما ایک ہی ڈگر پر گامزن ہیں، حکمرانوں کی ناکام خارجہ و معاشی پالیسیوں کی وجہ سے ملک خارجہ و معاشی محاذ پر کمزور ہورہا ہے۔ اپوزیشن کی بڑی جماعتیں چھوٹی جماعتوں کو ٹرک کی بتی کے پیچھے لگائے رکھے ہوئی ہیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ ابھی تک معاملات واضح نہیں ہیں کیوں کہ جو معاملات طے کئے گئے یا طے کرائے گئے۔ ان کی روشنی میں اپوزیشن کے بعض رہنما انتہائی سست رفتاری کا مظاہرہ کررہے ہیں اور کوئی توقع نہیں ہے کہ اے پی سی سمیت کوئی عملی اقدام سامنے آسکے۔ اس لیے قوم کے سامنے یہ بات آنی چاہئے کہ معاملات کیسے ہوئے ہیں اور مزید کیسے طے ہونگے اور کیا اپوزیشن اسی پوزیشن میں رہے گی اور اپوزیشن کی چھوٹی جماعتوں کو ٹرک کی بتی کے پیچھے لگائے رکھے گی، جس طرح ماضی میں ان کے ساتھ سلوک ہوا ہے۔

انہوں نے کہا کہ اختر مینگل ابھی تک آزاد نشستوں پر ہیں لیکن ہم سمجھتے ہیں کہ ماضی میں جو ہمارے ساتھ ہوا اللہ نہ کرے اختر مینگل اور ان کی جماعت کے ساتھ ہو۔ حافظ حسین احمد نے کہا کہ عمران خان مافیا کے کپتان بن چکے ہیں اور وہ چینی، گندم اور پیٹرول مافیا کی سرپرستی کررہے ہیں۔

عمران خان اگر واقعی مافیا کے خلاف ہیں تو پہلے اپنی کابینہ میں موجود مافیا کے خلاف کاروائی کریں۔

انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت کی کارکردگی صفر ہے۔ حکومت سلیکٹراورچند اتحادیوں کی بیساکیوں پر کھڑی ہے۔ جس دن اپوزیشن سنجیدہ اور یکجا ہوئی تو ایک دن بھی حکومت چل نہیں سکتی۔

انہوں نے کہا کہ نااہل حکمرانوں کی ناکام پالیسیوں اور کرپشن کی وجہ سے ملک معاشی طور پر کمزورہوچکا ہے۔ اپوزیشن جماعتوں کو اب سنجیدگی کا مظاہرہ کرنا ہوگا۔

subscribe YT Channel install suchtv android app on google app store