نوازشریف کی العزیزیہ اسٹیل ملز ریفرنس میں سزا کے خلاف اپیل پرسماعت 9 مئی تک ملتوی

اسلام آباد ہائی کورٹ نے نوازشریف کی سزا کے خلاف اپیل پرسماعت نو مئی تک ملتوی کردی فائل فوٹو اسلام آباد ہائی کورٹ نے نوازشریف کی سزا کے خلاف اپیل پرسماعت نو مئی تک ملتوی کردی

اسلام آباد ہائی کورٹ نے نوازشریف کی العزیزیہ اسٹیل ملز ریفرنس میں سزا کے خلاف اپیل پر سماعت نو مئی تک ملتوی کردی ہے۔

تفصیلات کے مطابق العزیزیہ ریفرنس میں نواز شریف کی سزا کے فیصلے کے خلاف اپیل پر سماعت جسٹس عامر فاروق اور جسٹس محسن اختر کیانی پر مشتمل اسلام آباد ہائی کورٹ کے دو رکنی بینچ نے کی۔

سماعت کے آغاز پر ہی نواز شریف کے وکیل خواجہ حارث نے کیس کے پیپر بکس میں کچھ دستاویزات نہ ہونے کی نشاندہی کی، وکیل صفائی نے انکشاف کیا کہ ان کے پاس موجود پارٹ ون اورتو عدالت کو دی گئی دستاویزسے مختلف ہیں۔

خواجہ حارث نے کہا کہ کچھ اکاونٹس کی تفصیلات پیپر بکس کے ساتھ نہیں ہیں یہ دستاویزات کیوں مسنگ ہیں اس کا ہمیں نہیں پتہ، جس پر جسٹس عامر فاروق نے ریمارکس دئیے کہ برانچ کو بلا کر پوچھ لیتے ہیں ایسا کیوں ہوا، جو بھی ریکارڈ برانچ کے پاس آیا ہوگا اسی کی فوٹو کاپی کرائی ہوگی،جو چیزیں مسنگ ہیں وہ باہمی مشاورت سے درست کر لی جائیں گی۔

عدالت نے نوازشریف کو طبی بنیاد پرآج کی حاضری سے استثنی دیا، بعد ازاں عدالت نے پیپر بکس کو مکمل کرنے کیلئے پراسیکیویشن اور وکیل صفائی کو ایک ایک نمائندہ مقرر کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے کیس کی سماعت نومئی تک ملتوی کردی۔

 

subscribe YT Channel install suchtv android app on google app store