پاکستانی ایئرلائنز کو یورپ، امریکا اور برطانیہ کے لیے پروازوں کی اجازت مل گئی

پاکستان سول ایوی ایشن اتھارٹی فائل فوٹو پاکستان سول ایوی ایشن اتھارٹی

پاکستان سول ایوی ایشن اتھارٹی (پی سی اے اے) نے کہا ہے کہ انٹرنیشنل سول ایوی ایشن آرگنائزیشن (آئی سی اے او) نے تمام پابندیاں ہٹادی ہیں اور پاکستانی ایئرلائنز کو یورپ، امریکا اور برطانیہ کے لیے پروازوں کی اجازت ہوگی۔

پی سی اے اے کے ترجمان سیف اللہ خان کا کہنا تھا کہ آئی سی اے او نے پائلٹس کو لائسنسز جاری کرنے کے لیے ایوی ایشن اتھارٹی پر اور پاکستانی ایئر لائنز پر یورپ، امریکا اور برطانیہ کے لیے پروازوں پر عائد پابندی ہٹا دی ہے۔

سیف اللہ خان نے کہا کہ بین الاقوامی ایوی ایشن نے سیفٹی سے متعلق تمام اعتراضات بھی واپس لیے ہیں اور اس حوالے سے کیے گئے اقدامات پر اطمینان کا اظہار کیا ہے۔

آئی سی اے او نے پاکستان سول ایوی ایشن اتھارٹی کے ڈائریکٹر جنرل خاقان مرتضیٰ کو خط میں لکھا کہ پاکستان نے تمام اعتراضات پر اطمینان بخش اقدامات کیے ہیں۔

آئی سی اے او کے اس اقدام کے بعد پی آئی اے سمیت تمام پاکستانی ائیرلائنز پر یورپ، برطانیہ اور امریکا کے لیے عائد پابندیاں ختم کردی گئی ہیں۔

یاد رہے اقوام متحدہ کے ہوابازی کے ادارے ’آئی سی اے او‘ نے ستمبر 2020 میں پاکستان کو مشورہ دیا تھا کہ وہ اُس سال مئی میں پاکستان انٹرنیشنل ایئرلائنز (پی آئی اے) کے طیارے کے حادثے کے بعد جعلی لائسنس کا معاملہ منظر عام پر آنے کے بعد اصلاحی کارروائی کرے اور کسی بھی نئے پائلٹ کو لائسنس کا اجرا روک دے۔

پائلٹ لائسنس اسکینڈل نے پاکستان کی ایوی ایشن انڈسٹری اور پی آئی اے کو بہت نقصان پہنچایا اور اسی کی وجہ سے یورپ اور امریکا کی جانب سے پروازوں پر پابندی لگا دی گئی تھی۔

گزشتہ برس جون میں پاکستان نے ایئر لائن کے 262 پائلٹس کو اہلیت کی جانچ پڑتال کے امتحانات کے لیے گراؤنڈ کردیا تھا، یہ کارروائی کراچی میں 2020 میں ایک ہوائی جہاز کے حادثے کی ابتدائی رپورٹ کے بعد کی گئی تھی۔

رپورٹ سے پتا چلا تھا کہ پائلٹ معیاری طریقہ کار پر عمل کرنے میں ناکام رہے تھے اور الارم کو نظر انداز کیا گیا تھا۔

یہ آڈٹ 6 شعبوں پائلٹ کی اہلیت، پرواز کے معیارات، ذاتی لائسنسنگ اور امتحان، فضائی نیوی گیشن سروسز، ایروڈرومز اور ہوائی جہاز کے حادثے میں کیا گیا۔

آئی سی اے او کی ٹیم نے پاکستان ایروناٹیکل کمپلیکس، پی آئی اے کے دفاتر اور دیگر ایئر لائنز کے دفاتر کا دورہ کیا تھا۔

subscribe YT Channel install suchtv android app on google app store