کورونا اپنے اختتام کی جانب بڑھنے لگا، پاکستان سے کورونا کب تک ختم ہوجائے گا؟ بڑی شخبری آگئی

کورونا وائرس فائل فوٹو کورونا وائرس

راولپنڈی میڈیکل یونیورسٹی کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر عمر نے کہا ہے کہ کورونا کی وبا اپنے اختتام کی جانب بڑھ رہی ہے۔

ڈاکٹر عمر نے کہا کہ کورونا وائرس سے خوفزدہ نہ ہوں ۔ہلکہ بخار، نزلہ اور زکام کی صورت میں گھر پر ہی رہیں۔ صرف تیز بخار یا سانس لینے میں تکلیف کی صورت میں اسپتال آئیں۔

ڈاکٹر عمر نے کہا کہ آنے والے وقت میں کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد میں کمی ہوگی ۔راولپنڈی میں پانچ ہزار افراد کو کورونا وائرس کے شبے میں اسپتال داخل کیا گیا ہے۔

وائس چانسلر راولپنڈی میڈیکل یونیورسٹی ڈاکٹر عمر نے مزید کہا کہ راولپنڈی میں 2 ہزار مریضوں میں اب تک کورونا وائرس کی تشخیص ہوئی ہے۔ راولپنڈی میں کورونا وائرس کے 1800 مریض صحت یاب ہو چکے ہیں، جب کہ یہاں تین ماہ کے دوران اس وائرس کے باعث 190 مریض انتقال کر چکے ہیں۔

خیال رہے کہ ملک بھر میں کورونا وائرس سے مزید 118 افراد جاں بحق ہوگئے۔ جس کے بعد جاں بحق افراد کی مجموعی تعداد 4304 ہوگئی، جبکہ وائرس کے کیسز کی تعداد 2 لاکھ 9 ہزار 337 تک جا پہنچی۔ اب تک 98 ہزار 503 مریض صحتیاب ہوچکے ہیں۔

منگل کو نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 2846 افراد کورونا وائرس کا شکار ہوگئے۔ جس کے نتیجے میں مریضوں کی تعداد دو لاکھ 9 ہزار 337 ہوگئی جبکہ اب تک 98 ہزار 503 مریض صحتیاب ہوچکے ہیں۔

این سی اوسی کے مطابق ملک بھر میں کورونا وائرس کے کیسز کی تعداد 2 لاکھ 9 ہزار 337 ہو گئے،گزشتہ 24 گھنٹے کے دوران 2846افراد کورونا وائرس کا شکار ہوئے۔

این سی اوسی کے مطابق سب سے زیادہ سندھ میں کورونا مریضوں کی تعداد 81 ہزار 985 ہے، پنجاب میں 75501 اور خیبرپختونخواہ میں 26115 مریض زیر علاج ہیں ۔ تاہم اب راولپنڈی میڈیکل یونیورسٹی کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر عمر کورونا وبا کے پاکستان سے ختم ہونے کی نوید سنا دی ہے۔

subscribe YT Channel install suchtv android app on google app store